سید نوید قمر

image description

تعارف

سید نوید قمر


سابق وزیر دفاع سید نوید قمر پیپلز پارٹی کے سینئر رہنما ہیں۔

پیدائش اور تعلیم

نوید قمر 22 ستمبر 1955 کو کراچی میں پیدا ہوئے۔

انہوں نے 1976 میں مانچسٹر یونیورسٹی سے کمپیوٹر سائنس کی ڈگری حاصل کی۔ بعد ازاں امریکا کی نارتھ روپ یونیورسٹی سے مینجمنٹ اور کیلفورنیا اسٹیٹ یونیورسٹی سے ایم بی اے کی ڈگری حاصل کی۔

سیاسی سفر

نوید قمر نے اپنے سیاسی سفر کا آغاز 1988 کے انتخابات سے کیا جب وہ پیپلز پارٹی کے ٹکٹ پر الیکشن لڑ کر سندھ اسمبلی پہنچے۔ اس وقت انہیں سندھ کا وزیر اطلاعات مقرر کیا گیا۔

سنہ 1990 میں وہ ایک بار پھر الیکشن جیت کر رکن قومی اسمبلی بنے۔ 1993 میں الیکشن جیتنے اور رکن قومی اسمبلی مقرر ہونے کے بعد انہیں نجکاری کمیشن کا چیئرمین مقرر کیا گیا۔

سنہ 1997 کے انتخابات میں فتح کے بعد انہیں نجکاری و خزانہ کا وفاقی وزیر مقرر کیا گیا۔

سنہ 2002 میں وہ این اے 222 سے ایک بار پھر رکن قومی اسمبلی منتخب ہوئے۔ 2008 میں انتخاب جیتنے کے بعد انہیں وفاقی وزیر برائے نجکاری بنایا گیا جبکہ شپنگ کی وزارت کا اضافی قلمدان بھی دیا گیا۔

اسی سال وہ چند ماہ کے لیے وزیر خزانہ بھی رہے۔

سنہ 2009 میں انہیں پیٹرولیم اور قدرتی ذخائر کی وزارت کا اضافی قلمدان سونپا گیا تاہم 2011 میں ان سے یہ اضافی چارج واپس لے کر وزارت پانی و بجلی کا عہدہ سونپ دیا گیا۔

سنہ 2011 میں ہی انہیں وزارت دفاع بھی مقرر کیا گیا۔

سنہ 2013 کے الیکشن میں وہ اسی حلقے سے دوبارہ رکن قومی اسمبلی منتخب ہوئے۔ ان کا حلقہ این 222 ٹنڈو محمد خان کم حیدر آباد کم بدین تھا تاہم اب یہ حلقہ تھر پارکر 2 ہے۔

2016 میں سید نوید قمر کو قومی اسمبلی میں پیپلز پارٹی کا پارلیمانی لیڈر بنایا گیا۔

سنہ 2017 میں نواز شریف کی نااہلی کے بعد پیپلز پارٹی کی جانب سے انہیں وزارت عظمیٰ کے عہدے کا امیدوار نامزد کیا گیا تاہم شاہد خاقان عباسی کے مقابلے میں انہوں نے صرف 47 ووٹ حاصل کیے۔